بجٹ کیا ہوتا ہے؟ بجٹ کیوں پیش کیا جاتا ہے؟ بجٹ کی تیاری کیسے کی جاتی ہے؟

ہے۔ بجٹ ایک مختصر دستاویز ہوتی ہے جس میں دیے گئے مدت کے دوران توقعات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے اخراجات اور آمدنی کی تقسیم کی جاتی ہے۔ بجٹ معمولی طور پر سالانہ بنایا جاتا ہے اور اس کو عموماً کسی قومی حکومت یا صوبائی حکومت کے وزیراعظم یا وزیر مالیات پیش کرتا ہے۔

بجٹ کیوں پیش کیا جاتا ہے؟

بجٹ کیوں پیش کیا جاتا ہے؟ بجٹ کو عوامی خزانوں کے لئے ایک پیشگوئی کا ذریعہ تصور کیا جاتا ہے۔ یہ حکومت کو اخراجات کو منظم طور پر کنٹرول کرنے، آمدنی کو پلان کرنے اور مالی اہداف تعیین کرنے کی اجازت دیتا ہے۔ بجٹ کے ذریعے، حکومتی ٹیم اقتصادی قوت، سیاسی اہداف اور ملکی ترقی کی منصوبہ بندی کو پیش کرتی ہے۔

بجٹ کی تیاری کیسے کی جاتی ہے؟

بجٹ کی تیاری کیسے کی جاتی ہے؟ بجٹ تیار کرنے کی عمل کو بجٹ میکنگ یا بجٹ میکنگ پروسیس کہا جاتا ہے۔ یہ عمل معمولاً چند مراحل پر مشتمل ہوتا ہے۔ عام طور پر یہ مراحل شامل ہوتے ہیں۔

نجٹ کی تشکیل کیسے اور کون کرتا ہے؟

  1. تقسیم اخراجات کی تشکیل: – اس مرحلے میں، حکومت کے وزارتوں اور اداروں کو تقسیم اخراجات کے لئے رقم تجویز کی جاتی ہے۔ اس میں عوامی خدمات، ترقیاتی منصوبے، سرمایہ کاری، دفاعی خریداری وغیرہ شامل ہوتی ہیں۔
  2. آمدنی کی تخمینہ: اس مرحلے میں، حکومت آمدنی کی تخمینے کو جمع کرتی ہے جو عوامی مالیات، سرمایہ کاری، اداری احکامات، قرضے، اور دیگر منابع سے حاصل ہو سکتی ہیں۔
  3. بجٹ کے تشکیل: -اس مرحلے میں، تقسیم اخراجات اور آمدنی کے تخمینوں کو مدِ نظر رکھتے ہوئے، بجٹ کی تیاری ہوتی ہے جو عموماً ایک بجٹ بل کی شکل میں پیش کیا جاتا ہے۔
  4. بجٹ کی منظم کارکردگی: جب بجٹ پیش کیا جاتا ہے، اس کی تنظیم اور ممیزی کے لئے مختلف مراحل پر عمل درآمد ہوتا ہے۔ منظم کارکردگی بجٹ کی اجراء کو نظارت کرتی ہے اور اخراجات اور آمدنی کو پیش بردار رکھتی ہے۔
  5. بجٹ کی منصوبہ بندی کیسے؟
  6. بجٹ وہ مالی منصوبہ بندی ہے جو حکومت دوسروں کی اشتہار کے لئے درآمد کے ذریعے اور حکومتی اخراجات کو مد نظر رکھتے ہوئے تیار کرتی ہے۔ جمہوری ممالک میں بجٹ وزیر مالیہ کی طرف سے پارلیمان میں پیش کیا جاتا ہے جس کی منظوری وزیر اعظم کے ذریعے حاصل کی جاتی ہے۔ پاکستان کا مالی سال 1 جولائی سے 30 جون تک ہوتا ہے۔ بجٹ اس لئے بنایا جاتا ہے کیونکہ حکومتی اخراجات کو پورا کرنے کے لئے بجٹ بہت اہم ہوتا ہے۔ حکومت مختلف سیکٹر پر کیا کام کرتی ہے۔

0 Comments

Leave a Reply

Avatar placeholder

Your email address will not be published. Required fields are marked *